کینو کھائیں اور چھلکوں کی چائے بنائیں ! کینو کے وہ فائدے جو اس موسم میں آپ کو بھی مہنگی دواؤں سے بچا سکتے ہیں

کینو سردی کا وہ پھل ہے جس کا انتظار بچہ بچہ کرتا ہے۔ اس کا کھٹا میٹھا ذائقہ سب کو اپنی جانب مرغوب کرتا ہے۔ ایک مرتبہ کینو کھانا شورع کردیں تو ہاتھ نہیں رکتا یہ اتنا مزیدار ہوتا ہے۔ کینو میں وٹامن سی کی وہ مقدار موجود ہے جو دنیا کے کسی بھی پھل میں بھی موجود نہیں ہے اس کو کھانے کے سردی کا لیکن انتظار بھی کرنا پڑتا ہے۔

کچھ لوگ کینو کو زیادہ اس لیے نہیں کھاتے کہ ان کو یہ احساس ہوتا ہے کینو کھانے کے بعد پیشاب کی حاجت زیادہ ہوتی ہے جبکہ یہ اصل میں آپ کے اندرونی نظام کو ہر طرح سے مضبوط بنانے میں آپ کی مدد کر رہا ہوتا ہے۔

کینو کو کھائیں اور چھلکوں کی چائے:
کینو کے چھلکوں کی چائے پینے سے بہت زیادہ فائدہ ہوتا ہے۔ وہ لوگ جو کم وقت میں خود کو سمارٹ بنانا چاہتے ہیں واور جلد پر گلو لانا چاہتے ہیں ان کے لیے یہ کینو ایک ایسا بہترین پھل ہے جس کی مثال نہیں ملتی۔

چھلکوں کی چائے کے فائدے:
٭ نزلہ زکام:
کینو کے چھلکوں کی چائے نزلے زکام اور کھانسی کے علاج میں مفید ہے کیونکہ یہ ہمارے مدافعتی نظام کو بھی کنٹرول کر رہا ہوتا ہے جس سے جسم بھی مضبوط ہوتا ہے اور وائرل انفیکشن سے بھی بچا جا سکتا ہے۔

٭ بال:
سردی میں بالوں کے گرنے کی ٹینشن نوجوانوں کو زیادہ ہوتی ہے۔ اس لیے وہ کینو کو کھا کر چہرے پر گلو لائیں اور چھلکوں کی چائے پی کر بالوں کو مضبوط بنائیں۔

٭ ایکنی:
سردی میں بھی کچھ لوگوں کو ایکنی کے مسائل ہوتے ہیں ان کے لیے یہ کینو کی چائے ایک اینٹی ایکنی کی دوائی کے طور پر کام کرتی ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.