میں پہلے آپ کا شاگرد ہوں، افسر بعد میں ۔۔ جانیں جب استاد اپنے 20 گریڈ کے شاگرد افسر کے کمرے میں اچانک آگیا تو اس نے کیا کیا؟

آپ کتنے بڑے افسر ہو یہ آپکا اخلاق دیکھاتا ہے ۔ آج سے کچھ دن پہلے ایک تصویر منظر عام پر آئی جس میں صاف دیکھا جا سکتا ہے کہ 20 گریڈ کے سرکاری ملازم نے اپنے بزرگ استاد کو اپنی کرسی پر بٹھا دیا ۔ یہ کیا بات ہے تو آئیے جانتے ہیں؟

ہوا کچھ یوں کہ پاکستان کے صوبے خیبر پختونخواہ میں 20 گریڈ کے سیکریٹری ایریگیشن طاہر اورکزئی کے دفتر کا دروازہ ایک شخص نے کھٹکھٹایا جس پر دروازہ کھولا گیا۔

اور اپنے استاد کو دیکھتے ہی یہ فوراََ استاد کے ادب میں اپنی سیٹ سے اٹھ کھڑے ہوئے اور انتہائی عقیدت واحترام سے ان سے ملے ۔ نہ صرف ملے بلکہ انہیں اپنی کرسی پر بٹھا دیا۔

اور ان سے حال احوال پوچھتے ہوئے خود سامنے پڑی ہوئی ایک چھوٹی کرسی جس پر عام طور اپنے مسائل لے کر آئے لوگ بیٹھا کرتے ہیں اس پرخود بیٹھ گئے ۔ان کے اس عمل کی اب ہر طرف سوشل میڈ یا پر تعریف ہو رہی ہے۔

اور ہو بھی کیوں نہ کیونکہ کسی نے ٹھیک ہی کہا ہے کہ استاد بادشاہ تو نہیں ہوتا مگر بادشاہ بناتا ضرور ہے۔ واضح رہے کہ اگر طاہر اورکزئی صاحب کو جو آج یہ مقام حاصل ہے تو اس میں انکے والدین استادوں کا بہت بڑا ہاتھ ہے اس کے علاوہ جو یہ اپنے استادوں کا اتنا بڑا مقام ملنے کے بعد بھی اس قدر عزت کرتے ہیں یہی انکی کامیابی کا راز ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.